١٥ مئی ۲۰۲۴

تحریر: اعتزاز ابراہیم


لاہور

لاہور رائیونڈ کے علاقہ امین پورہ کے بلال شاہ نامی رہاشی نے 22 سالہ بھابھی ثناء کو ’غیرت ‘کے نام پر گلا کاٹ کر قتل کردیا ۔ قتل کا واقعہ 10 مئی کی شام کو پیش آیا۔واقعہ کی ایف آئی آر لڑکی کے والد جاوید کی مدعیت میں درج کی گئی۔ ایف آئی آر کے متن کے مطابق ثناء اپنے شوہر سے ناراضگی کی وجہ سے سات آٹھ ماہ سے اپنے والد کے گھر رہ رہی تھی ۔ دس مئی کی شام بلال شاہ لڑکی کے والد اور کزنز کی موجودگی میں گھر آیا اور ثناءسے بات کرنے کے بہانے الگ کمرے میں لے کر گیا جہاں اس نے چھری سے گردن پر وار کر کے لڑکی کو قتل کر دیا اور موقع سے فرار ہو گیا۔

ایف آئی ار کاپی

وائس پی کے کی ٹیم واقعہ کی تحقیقات کے لئے رائیونڈ میں موجود جائے وقوع گئی ۔ لڑکی کے والد جاوید سے بات کرنے کی کوشش کی گئی لیکن انہوں نے بات کرنے سے انکار کیا۔ جبکہ لڑکی کی قریبی رشتہ دار نے اپنا نام نہ ظاہر کرنے کی شرط پر بتایا کہ ثناء نے بارہا اپنے گھر والوں کو بتایا کہ وہ اپنے شوہر کے ساتھ خوش نہیں اورعلیحدگی چاہتی ہے لیکن لڑکی کے گھر والے نہیں مانے اور زبردستی اسے شوہر (شہزاد) کے ساتھ رہنے کا کہتے رہے۔

بلال شاہ (ملزم) کے والد ریاض نے وائس پی کے کی ٹیم سے بات کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ’’ ثناء کا محلے کے عادل نامی شخص کے ساتھ تعلق تھا ۔ ثناءکو اسی وجہ سے اس کے میکے بھیج دیا تھا۔ قتل سے ایک رات پہلے عادل ثناء کو ملنے اس کے گھر آیا اور جب دیور بلال کو اس کا پتہ چلا تو اس نے طیش میں آکر اگلے دن ثناء کا قتل کر دیا‘‘۔

بلال شاہ کے والد سے ثناء کے شوہر کے بارے میں پوچھا گیا تو انہوں نے کہا کہ ’’ شہزاد (شوہر) کپڑے کا کام کرتا ہے اور شریف آدمی ہے اس کا قتل سےکوئی تعلق نہیں۔ بلال شاہ (دیور) غصے کا تیز لڑکا ہے۔ اس نےغصے میں آکر یہ کام کیا۔‘‘

اس سوال پر کہ، قتل جیسے سنگین قدم اور قانون اپنے ہاتھ میں لینے کے بجائے شوہر نے طلاق کیوں نہیں دی، مقتولہ ثناء کے سسر کا کہنا تھا کہ ’’ حق مہر میں ایک لاکھ کی رقم لکھوائی گئی تھی، رقم ادا نہیں کر سکتے، اس لئے شہزاد نے طلاق نہیں دی۔‘‘

شہزاد ( شوہر) اور ثنا (بیوی) آپس میں قربیی رشتے دار بھی تھے اور خاندان کے کچھ لوگ صلح کے ذریعے معاملے کو ٖختم کر کے قتل کا معاملہ دبانا چاہتے ہیں۔

دوسری طرف انچارج انویسٹی گیشن تھانہ رائیونڈ سٹی رانا شرافت کا کہنا ہے کہ ملزم بلال شاہ کو گرفتار کر لیا گیا ہے ملزم نے پولیس کے سامنے اقرار جرم کر لیا ہے ۔ ملزم نے بھابھی ثناء کو چھری کے وار کر کے قتل کیا اور فرار ہو گیا تھا۔ ملزم کے قبضے سے آلہ قتل چھری بھی برآمد کر لی گئی ہے ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here