۲ جون ۲۰۲۴

ضیاء آغا


تربت

آٹھ لاپتہ افراد کے رشتہ دار بلوچستان کے ضلع کیچ میں ڈپٹی کمشنر کے دفتر کے باہر اپنے رشتہ داروں کی بازیابی کے لئےگزشتہ 14 روز سے دھرنا دئے ہوئے ہیں۔دھرنے میں آٹھ لاپتہ افراد کے خاندان اور سول۔سوسائٹی کے لوگ شامل ہیں۔ لاپتہ افراد کے اکثریت خاندانوں کا تعلق اسی ضلع سے ہے۔

2 جون کو لاپتہ افراد کے خاندانوں سے ڈپٹی کمشنر کیچ نے تین دن کے وقت پر دھرنا ختم کروایا لیکن لاپتہ افراد بازیاب نہ ہونے کے سبب وہ ایک بار پھر دھرنا دینے پر۔مجبور ہیں۔ بلوچ یکجہتی کمیٹی کے وسیم سفر بتاتے ہیں کہ مظاہرین سے مذاکرات نہیں کئے جارہے۔وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز کے مطابق 7 ہزار سے زائد بلوچ لاپتہ ہیں۔جبکہ حکومت ان اعداد و شمار کو درست نہیں مانتی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here